تازہ ترین  
loading...

ننکانہ: ڈسٹرکٹ بار کونسل کی جانب سے یونیورسٹی بچاو ریلی
    |     4 months ago     |    پاکستان
ننکانہ: ڈسٹرکٹ بار کونسل کی جانب سے یونیورسٹی بچاو ریلی
ننکانہ صاحب(آپکی بات /شاہ زیب گجر) ڈسٹرکٹ بار ننکانہ کی طرف سے نکالی جانے والی باباگورونانک انٹرنیشنل یونیورسٹی ننکانہ بچاو تحریک کی طرف سے ڈسٹرکٹ بار سے گول چکر تک ایک بھرپوراحتجاجی ریلی نکالی گئی 
جس میں ضلع بھر کے وکلا،تاجر،طلبا تنظیمیں،کونسلر حضرات،ننکانہ کلرک ایسوسی ایشن،سول سوسائٹی سمیت سرکاری سکول،کالج کے طلبا،سنی یوتھ فورس اور شہریوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔
مقررین کا کہنا تھا کہ اب چئرمین صدیق الفاروق کے پاس مکمل یونیورسٹی ننکانہ کو دینے کے سوا کوئی چارہ نہ ہے۔
سینئر وکلا رہنما انور زاہد ایڈووکیٹ نے کہا کہ اب ہم بابا گورونانک کے جنم دن پرایک احتجاجی میلہ لگائے گے اور چئرمین صدیق الفاروق کو دعوت دیتے ہیں کہ وہ ہمارہ میلہ دیکھنے آئے۔
مقررین نے مزید کہا کہ آج ریلی کے شرکا نے یہ ثابت کردیا ہے کہ ہم اس یونیورسٹی کے حصول کے لئے متحد ہے۔
مقررین نے شدید نعرے بازی کرتے ہوئے کہ3 تاریخ کے سیمینار کے بعد ہمارے احتجاج کا اگلہ پڑاو گورونانک کے دروازے کے آگے ہوگا۔
چئرمین بلدیہ چوہدری نعیم احمد نے صدیق الفاروق کی برطرفی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ پوری یونیورسٹی ہماری ڈیمانڈ ہے جو ہم انشاللہ لے کر رہے گے۔
تحریک کے کنونئر امین بھٹی نے کہا کہ چئرمین نے مزارعین پرپہلے کی نسبت جو بہت زیادہ کرایہ لگا دیا ہےاگر وہ بھی کم نہ کیاگیا تو ہم مزارعین کے بھی ساتھ کھڑے ہونگے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ ننکانہ کے اردگرد موجود بستیوں کو مالکانہ حقوق دیئے جائے۔
!یاد رہے ریلی میں لیاقت حیات بھٹی ایڈووکیٹ بھی شامل ہوئے تھے۔ جو صدیق الفاروق کی بنائی جانےوالی مشاوراتی کمیٹی میں وکلا کی نمائندگی کررہے ہیں۔ اور انہوں نے بھی اس تحریک کا ساتھ دیتے ہوئے مکمل یونیوسٹی کا مطالبہ کیا ہے

loading...
Feedback
Dislike
 
Normal
 
Good
 
Excellent
 




فیس بک پیج

تصویری خبریں

ad

نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2017 apkibat. All Rights Reserved