تازہ ترین  

دل شور جب مچاے تو کہتی ہوں میں غزل
    |     6 months ago     |    شاعری
رنج والم ستاے تو کہتی ہوں میں غزل
فرقت جو جاں جلاے تو کہتی ہوں میں غزل

چپ چاپ سونی رات میں یادوں کا رقص ہو
دل شور جب مچاے تو کہتی ہوں میں غزل

دھڑکن کا زور ٹوٹے کہ جذبے ہوں قید میں
جب جان پھڑپھڑاے تو کہتی ہوں میں غزل

کوئی نہیں ہے آسرا دنیا میں اب مرا
پر رب جو یاد آے تو کہتی ہوں میں غزل

اس کے وجود سے مری روشن ہے کائنات
بیٹی جو مسکراے تو کہتی ہوں میں غزل

یوں تو عروسہ ضبط سے واقف ہوں میں مگر
جب اشک جھلملائے تو کہتی ہوں میں غزل
....................
شاعرہ: عروسہ جیلانی
Feedback
Dislike
 
Normal
 
Good
 
Excellent
 




فیس بک پیج

تصویری خبریں

ad

نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2017 apkibat. All Rights Reserved