تازہ ترین  

تری چاہت کی عادی ہوگئی ہوں
    |     4 months ago     |    شاعری
تری چاہت کی عادی ہوگئی ہوں
ہتھیلی تو میں مہندی ہوگئی ہوں

کسی کے واسطے تازہ غزل میں
تری خاطر کہانی ہوگئی ہوں

دعاؤں میں مجھے وہ مانگتا ہے
ادھر میں بھی نمازی ہوگئی ہوں

مجھے قسمت پہ اپنی ہے بھروسہ
ملا جو اس پہ راضی ہوگئی ہوں

سنا جو ذوق پڑھنے کا ہے اس کو
میں سر تا پا کتابی ہوگئی ہوں

مرے دریا ہوئی جب ضم میں تجھ میں
سمندر سے بھی گہری ہوگئی ہوں

ستاروں سے کیا جب استفادہ
اسی دن سے شہابی ہوگئی ہوں

تری نظروں نے دیکھا مجھ کو جس دم
حیا سے میں گلابی ہوگئی ہوں

بچھڑ کر تجھ سے اے زریاب اب تو
میں ہر جذبے سے عاری ہوگئی ہوں

Feedback
Dislike
 
Normal
 
Good
 
Excellent
 




فیس بک پیج

تصویری خبریں

ad

نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2017 apkibat. All Rights Reserved