تازہ ترین  

نور عالم ﷺ‘‘علی عمران ممتاز کا شاہکار کارنامہ
    |     8 months ago     |    گوشہ ادب
کتاب زندگی ہے اور دُنیا کا وہ امیر ترین شخص ہے جو کتاب پڑھتا ہے ،کتاب رکھتا ہے ،کتابوں میں رہتا ہے ۔مطالعہ کا شوق رکھتا ہے اور بڑوں کی زندگی کے واقعات پڑھ کر منزل کی طرف بڑھتا ہے ۔
یہ وہ دولت ہے جو کبھی ختم نہیں ہوتی ۔اللہ تعالیٰ نے اپنے بندوں کی رہنمائی کے لئے بھی صحیفے،کتب نازل کی ۔کتاب شعور دیتی ہے ۔کتاب جینے کے رنگ ڈھنگ بتاتی ہے ۔کتاب ہی آکسیجن کا کام دیتی ہے ۔بس کتاب زندگی ہے ۔
میری مجبوری یہی ہے کہ دن بھر کھانا نہ ملے، کوئی بات نہیں لیکن اگر ایک دن بھی میرے پاس کتاب نہ ہو تو میں مر جاؤں گا ۔مجھے کتابوں سے باتیں کرنا ،یہ دوستی نبھانا اچھا لگتا ہے ۔کتابیں ہی میری استاد ہیں ۔میں کتابوں سے بہت کچھ سیکھتا ہوں ۔رہنمائی حاصل کرتا ہوں ۔
کتابوں کی بات چل نکلی ہے تو نور عالم ﷺکتاب چند دنوں سے زیر مطالعہ رہی ہے ۔یہ بہت اچھی ،اعلیٰ اور معیاری کتا ب ہے جس کے مصنف کا تعلق میری پاک دھرتی ،اولیاء اللہ کی سر زمین ملتان شریف سے ہیں ۔
علی عمران ممتاز کو میں عرصہ سات سال سے جانتا ہوں ۔نہایت مخلص اور سادہ شخص ہے۔ملنسار ہے ۔چہرے پہ ہر وقت مسکراہٹ سجی رہتی ہے ۔وہ ہر کسی کا دوست ہے۔چاہے دُشمن ہے یا دوست ۔میں اس شخصیت کا اس لحاظ سے بھی قائل ہوں کہ جب بھی کوئی مسئلہ درپیش ہو بہترین حل نکال کر دیتے ہیں ۔اُس شخص میں بے شمار خوبیاں اُتم موجود ہیں ۔یہ حالات سے گھبراتا نہیں بلکہ سینے تان کر کھڑا ہو جاتا ہے ۔ہر طوفان کا مقابلہ کرتا ہے ۔یہ بہادر اور حوصلے والا شخص ہے ۔
علی عمران ممتاز کا ادبی قد کاٹھ بہت بڑا ہے ۔آپ بچوں کے ادیب کے حوالے سے جانے جاتے ہیں اور ملتان کی پاک دھرتی سے عرصہ تیرہ سال سے ماہنامہ کرن کرن روشنی (بچوں کا رسالہ )باقاعدگی سے نکال رہے ہیں ۔اس عرصے میں کئی بار ماہنامہ کرن کرن روشنی نے ایوارڈ بھی جیتے ہیں ۔
علی عمران ممتاز بطور لکھاری کسی تعارف کے محتاج نہیں ۔آپ بچوں کے بہترین لکھاری ہونے کے ساتھ ساتھ ماہنامہ کرن کرن روشنی کے چیف ایڈیٹر ہیں ۔ادبی سرگرمیو ں میں بڑے متحرک انسان ہیں ۔ان کی کہانیاں بچوں ،بڑوں کے لئے اصلاحی ،اخلاقی ،تعمیری ہوتی ہیں ۔نور عالم ﷺ کے ساتھ اب تک گیارہ کتب لکھ چکے ہیں اور صدارتی ایوارڈ بھی وصول کر چکے ہیں ۔یہ ہمارے لئے بھی کسی اعزاز سے کم نہیں ہے ۔
ان کی تمام خدمات ایک طرف، نور عالم ﷺ لکھنے پر ان کا قد کاٹھ اور بڑا ہو گیا ہے۔ان کا انداز تحریر نہایت ہی سادہ ہے ۔سادہ اور چھوٹے چھوٹے جملوں میں کہانی کو آگے بڑھاتے ہیں اور قاری کے ذہن کے مطابق ،ان کی انگلی پکڑ کر ساتھ ساتھ لے کر چلتے ہیں ۔ان کی کہانیاں بوریت کا شکار نہیں ہونے دیتیں۔علی عمران ممتاز ،منظرنگاری، استعاروں سے کام نہیں لیتے ۔سادہ اسلوب میں کہانی کو شروع کرتے ہیں اور قاری کی نبض شناش کے طور پر کام کرتے ہوئے کہانی میں دلچسپی کا پہلو ختم نہیں ہونے دیتے ۔قاری آخر تک کہانی میں محو رہتا ہے اور لطف لیتا ہے ۔ان کی کہانیاں سوچ کو بدلتی ہیں ،سیدھا راہ دِکھاتی ہیں ۔ایک منزل متعین کراتی ہیں ۔ایک مقصد دیتی ہیں ۔ایک راستہ دیتی ہیں ۔یقین نہ آئے تو صرف ’’نور عالم ﷺ ‘‘کتاب کو ہی ایک بار پڑھ کر دیکھ لیں ۔جس میں اُن کی مکمل شخصیت اُبھر کر سامنے آتی ہے ۔یہ بہت بڑا کارنامہ ہے ۔نورعالم ﷺ بچوں کی کہانیوں پر مشتمل کتاب ہے ۔رسول اکرم ﷺ کی مکمل زندگی کا احاطہ کرتی ،معلوماتی ،منفرد اور معیاری کتاب ہے ۔علی عمران ممتاز نے مختلف کتب سے معلومات لے کر اُن کو کہانیوں کی صورت پیش کیا ہے ۔
نور عالم ﷺ 104صفحات پر مشتمل کتاب ہے ۔یہ کتاب کرن کرن روشنی پبلشرز ملتان نے فروری2018میں شائع کی ہے جس کی نہایت ہی مناسب قیمت 200روپے ہے ۔نور عالم ﷺ کا انتساب بہت ہی پیارا ہے ’’نبی آخر الزمان و رحمتہ اللعامین حضرت محمد ﷺ کے نام جو پیدا ہوئے تو والد کا سایہ سر پر نہ تھا ،بچے تھے تو باہمت ،باکرداراور سچے تھے ،بڑئے ہوئے تو تاریخ عالم اور اقوام عالم کو حیران کر کے رکھ دیا ،دُنیا کو امن ،محبت ،اخوت ،مساوات اور انصاف کا تحفہ و نظام حیات دے گئے ‘‘
’’ہماری بات میں‘‘ مصنف کہتا ہے کہ بچپن میں سیکھا ہوا علم پتھر کی لکیر ہوتا ہے اسی لئے ننھے منے بچوں کی ذہنی آبیاری علم وادب کے ذریعے کرنا بہت ضروری ہے ۔ہماری بات کہتے ہوئے آخر میں اپنا مختصر تعارف کروا کر چلے جاتے ہیں ۔
’’علی عمران ممتاز کے لکھنے کا انداز ‘‘کے عنوان سے نامور ناول نگار امجد جاوید صاحب کہتے ہیں ۔کتاب میں موجودہر کہانی سیرت طبیہ کی واضح عکاسی کرتی نظر آتی ہے ۔میں علی عمران ممتاز کو مشورہ دوں گا کہ ہمیشہ اسی انداز کو اپنائیں ۔’’جدید دور کے نئے انداز ‘‘کے عنوان سے عبدالصمد مظفر’’پھول بھائی ‘‘کہتے ہیں نورعالم ﷺ ایک تحریک کواُجاگر اور بُرائی کو جڑ سے ختم کرنے کا مقصد لئے ہوئے ہے ۔جس میں جدید دور کے نئے انداز کے مثبت استعمال کو نمایاں کیا گیا ہے ۔علی عمران ممتاز کا اسلوب بیا ن انتہائی دلکش اور اعلیٰ ہے ۔نور عالم ﷺ کے ذریعے علی عمران ممتاز نے جس دن کا سامان اکٹھا کر لیا ہے وہ ہر مسلمان کا مقصدِ حیات ہے ۔
پہلی کہانی ’’عید کادن ‘‘رولادینے والی کہانی ہے ۔اب اسی فقرے کو ہی لے لیجئے ’’میرے بھائی تم جن وقتوں کی بات کر رہے ہو ،وہ مثالی زمانہ تھا حقوق العباد کی قدر تھی ،سب مل جل کر ہنسی خوشی زندگی گزارتے تھے ۔چاہے امیر ہو یا غریب ،سب مل کر خوشیاں مناتے تھے‘‘میاں فصیحت ،کہانی میں خوبصورت بات کی گئی ہے ۔اپنی نیکیاں چھپا کر رکھیں اور اپنی خامیاں عیاں کرنی چاہیے ۔اس نیکی اور عبادت کا کیا فائدہ جو صرف دکھاوے کے لیے ہو ۔’’روشنی ‘‘ایک انسان دوسرے گمراہ انسان کو حق کے راستے پر لے آیا۔۔۔اگلی کہانی ’’نور عالم ﷺ‘‘ٹائٹل کہانی ہے اور طویل کہانی ہے ۔اس میں معلومات کے ساتھ ساتھ کتب کے حوالے بھی دئیے گئے ہیں ۔
’’مثالی معاشرہ ‘‘،خوبصورت اچھوتی اور سنتوں کو اُجاگر کرتی کہانی ہے ۔’’روشن مستقبل ‘‘نے بہت متاثر کیا ۔اس میں جو درد بیان کیا گیا ہے ،جانے لفظوں کے روپ میں کیسے دھار لیا ۔آج کے معاشرے میں ایک ادیب جو پورے معاشرے کو سدھارنے میں لگا ہوا ہے زمانہ اس کے ساتھ کیا سلوک کرتا ہے ۔
’’آخری راز ‘‘کمال کہانی ہے ۔جس میں ایسی نیکی کا راز کھلتا ہے کہ آنکھیں نم دیدہ ہو جاتیں ہیں ۔آج بھی ’’زبیدہ ‘‘جیسے کردار موجود ہیں تبھی تو یہ وطن قائم و آباد ہے ۔’’نئی زندگی ‘‘اُلجھن دُور ہوئی ،بھی اخلاقی درس دیتی کہانیاں ہیں ۔نور عالم ﷺ کی آخری کہانی ’’ببلو کے خواب ‘‘کے عنوان سے ہے ۔پوری کتاب میں یہی اک کہانی پُراسراریت میں ہے لیکن کمال خوبصورتی سے اس میں بھی درس دیا گیا ہے کہ بے نمازی کے ساتھ کیا ہوتا ہے ۔
کتاب کے آخری صفحات پر انعامی کوپن دئیے گئے ہیں ،سوالوں کے جوابات دینے والوں کو انعام دیا جائے گاکل دس سوال ہیں جو کے نور عالم ﷺ کتاب کے اندر سے لیے گئے ہیں ۔آخر میں حوالہ جات دیے گئے ہیں کہ کتاب کی تیاری میں کہاں کہاں سے رہنمائی لی گئی ہے ۔
نور عالم ﷺ کا ٹائٹل بہت خوبصورت ہے اور سفید اچھا کاغذ پر شائع کی گئی ہے لیکن کتاب میں کمپوزنگ کی اغلاط موجود ہیں ۔یہ خال خال غلطیاں پڑھنے کے ردہم کو بدمزہ کرتی ہیں اور قاری کے موڈ کو خراب کرنے کی ناکام کوشش کرتی ہیں ۔
میں اُمید کرتا ہوں نور عالم ﷺ کی بدولت اللہ تعالیٰ اپنے پیارے حبیب حضر ت محمد ﷺ کے صدقے علی عمران ممتاز کو ہر خوشی ،ہر نعمت اور ہر کامیابی سے سرفراز فرمائے ۔نور عالم ﷺ دوجہانوں میں وسیلہِ نجات بن جائے آمین ۔
میں دعا گو ہوں اور علی عمران ممتاز کو مبارک باد پیش کرتا ہوں کہ علی عمران ممتاز نے جو کارنامہ سر انجام دیا ہے ،میرا سرفخر سے بلند ہے ۔اللہ تعالیٰ ان کو اور ان سے جڑے ہر شخص کو صحت و تندرستی کے ساتھ سلامت رکھے اور ان کے قلم کی روانی یونہی قائم و دائم رہے تاکہ ہمیں اچھا ادب پڑھنے کو ملتا رہے ۔آمین ثم آمین ۔ 





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved