تازہ ترین  

جنت سے غالب کا خط
    |     3 weeks ago     |    طنزومزاح
جنت سے غالب کا خط
محبتوں بھرا آداب
زہری صاحب ۔۔۔ ارے حیران مت ہوئیے ہم کو معلوم ہے زاہروی بابو ہیں آپ مگر کیا کریں یہاں جنت میں سسرے کچھ انسانی شیاطین نے ماحول خراب کر رکھا ہے۔ جون کو جوں کہتے ہیں۔ میر کو میئر پکارتے ہیں۔ ذوق کو چوک کہہ دیتے ہیں۔ فراز کو ناراض کہہ کر مخاطب کرتے ہیں۔ غرضیکہ مجھے خود غالب کی بجائے کبھی طالب تو کبھی قالب کا نام دے دیتے ہیں۔یہ دراصل جنت کے یوتھیے ہیں۔
زمین کے شاعروں پر باقاعدہ گفتگو ہوتی ہے۔ تمہارا ذکر کئی محفلوں میں سن چکا ہوں۔ کبھی کوئی یوتھیا تمہیں زہری تو کوئی زہروی کہہ دیتا ہے۔ یوتھ کونسل کی صدارت ساغر صدیقی کے پاس ہے اس کا ایک خاص چمچہ ہے جو تم کو اکثر زہرہ زہرہ کہہ کر تمہارا تذکرہ کرتا ہے۔
میرا تم کو مشورہ ہے کہ کسی زہرہ نامی لڑکی سے محبت کی پینگ ڈال لو۔ اگر کوئی لڑکی میسر نہیں آتی تو کسی خاتون کے ساتھ آنکھیں چار کرنے کی تیاری پکڑو۔ تاکہ جب تم جنت میں آؤ تو تمہارا استقبال زہرہ نامی شخصیت کے حوالے سے کیا جا سکے۔ کہنے کو تو یہ جنت ہے مگر یوتھیوں نے مجال ہے کہ اسے جنت رہنے دیا ہو۔ منٹو صاحب کے موسٹ فیورٹ شاعروں میں بھی تمہارا نام شامل ہے۔ جون صاحب کو تم سے گلے ہیں کہ ان کے جیسا لکھنے کی کوشش نہیں کرتے۔ منٹو کو پڑھ لیا کرو جون سا لکھ دیا کرو مجھ سا سنا لیا کرو۔
مجھے معلوم ہے تم اس وقت کس بات کے انتظار میں ہو ۔ شاعر ہوں شاعروں کی رگ رگ سے واقف ہوں۔ حور دنیا ہو یا حور جنت ہو شاعروں کو تسکین صرف حوروں سے ہوتی ہے یہ بجا ہے کہ اکثر کو حور مل جاتی ہے اور کسی کو ہورے ملتے ہیں۔
یہاں بھی کچھ ایسا ہی ہے۔ میر ، جون ، فراز ، منٹو اور ساغر حوروں کے ساتھ آنکھیں چار کرنے میں مصروف ہیں جبکہ آتش و جرات کو یہاں ہورے مل رہے ہیں۔ حوریں جوان ہیں ۔ بل کھاتی ہوئی کمر کی حامل ہیں۔ سینہ چوڑا ، قد لمبا ، ہاتھ بے حد حسین اور تو اور چہرہ غضب خدا کا ، حور دنیا میں کوئی ایک ایسی ہو تو لوگ اس کی خاطر قتل و غارت پر اتر آئیں۔
پچھلے کئی دنوں سے فراز صاحب کی خدمت میں حاضر نہیں ہوا آج ان سے ملاقات کا ارادہ ہے۔ تم کو فرصت کے وقت میں پھر کبھی خط لکھوں گا۔

فقط تمہارا غالب 





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved