تازہ ترین  

شہباز شریف 10 روزہ جسمانی ریمانڈ پر
    |     2 months ago     |    اداریہ
اپوزیشن لیڈر ، پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر اور سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو نیب کی درخواست پر آشیانہ اقبال ہاؤسنگ کیس کی تفتیش کے سلسلے میں 10 روزہ جسمانی ریمانڈ پر قومی احتساب بیورو (نیب) کے حوالے کردیا گیا۔
جنرل الیکشن 2018 سے چند روز قبل سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کی گرفتاری اور پھر سماعت میں تاخیر کرتے ہوئے فیصلہ اس وقت سنایا گیا جب الیکشن گزر چکے تھے اور نئی حکومت بن چکی تھی اور اب شہباز شریف کی گرفتاری بھی اسی نوعیت کی ہے کہ ضمنی انتخابات میں صرف سات دن باقی رہ گئے ہیں اور مسلم لیگ ن کے صدر اور اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ شہباز شریف کی گرفتاری کے ساتھ ہی 10 روزہ ریمانڈ بھی حاصل کرلیا گیا ہے۔ مسلم لیگ ن کے رہنماوں کے مطابق یہ گرفتاری سراسر زیادتی ہے اور شہباز شریف کو حکومتی ایماء پر گرفتار کیا گیا ہے۔ اگر لیگی رہنماوں کے موقف پر غور کیا جائے تو کچھ ایسا ہی محسوس ہوتا ہے جیسے پہلے نواز شریف کو جنرل الیکشن سے دور رکھنے کے لیے گرفتار کیا گیا ہو اور اب ضمنی الیکشن سے دور رکھنے کے لیے پارٹی لیڈر شہباز شریف کو دور کردیا گیا ہو۔ یہ گرفتاری اگر واقعی حقیقی ہے تو پہلے کیوں نہ ہوئی یا ضمنی الیکشن کے بعد بھی ہوسکتی تھی۔ آخر کیا وجہ ہے کہ اس اہم موقعہ پر مسلم لیگ ن کے صدر ، سابق وزیر اعلیٰ پنجاب اور اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی میاں شہباز شریف کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ اس گرفتاری نے عوام کو سوچنے پر مجبور کردیا ہے کہ آیا اس گرفتاری پر ثبوت پیش کرکے واقعی سزا دلوائی جائے گی یا صرف الیکشن ہونے تک ہی مہمان رکھا جائے گا۔ حتمی نتائج تو آنے والا وقت ہی بتائے گا۔






Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved