تازہ ترین  

پروگرام بعنوان :غمِ دوراں انٹرنیشنل طرحی مشاعر
    |     1 week ago     |    شاعری
پروگرام بعنوان :غمِ دوراں انٹرنیشنل طرحی مشاعر رپورٹ: نفیسؔ ناندوروی بھارت ادارہ، عالمی بیسٹ اردو پوئٹری دورِ حاضر میں دنیا کا واحد ادارہ ہے جو اِس برقی ترقی یافتہ دَور میں شعراء, ادباء و مُصنفینِ زبانِ اردو ادب کی ذہنی آبیاری کرتا ہے اور نئے نئے لسّانیاتی پروگرامز منعقد کرتا ہے.بِلا تشبیہہ و تمثیل منفرد مع کامیاب پروگرامز ادارے کی اہم خصوصیت اور شناخت بن چکے ہیں کامیابی کے اس منفرد سفر کو مزید آگے بڑھاتے ہوئے ادارے کی جانب سے ۳/اکتوبر ۲۰۱۸ بروز سنیچر, شام 7:00 بجے, 178واں پروگرام بہ عنوان غمِ دوراں عالمی طرحی مشاعرہ منعقد کیا گیا.. مصرعِ طرح پاکستان کے مشہور مقام ٹوبہ ٹیک سنگھ سے تعلق رکھنے والے استاد شاعر محترم عبد الحق عارف کی مشہور زمانہ غزل سے لیا گیا. ============================= مصرعِ طرح. لکھتا ہوں میں بے گور و کَفَن لاش پہ اکثر زلفوں کی طرف ہے مرا رجحان بہت کَم ============================= پروگرام آرگنائزر ادارے کے بانی و چئیرمن دِل آویز شخصیت محترم توصیف ترنل صاحب ہانگ کانگ رہےـ احباب کسی بھی محفل میں استاد شعراء کی شمولیت اُس محفل کی کامیابی کا وثیقہ گردانی جاتی ہےـ منصبِ صدارت پر بھارت سے تعلق رکھنے والے معتبر شاعر محترم مائل پالدھوی صاحب جلوہ افروز تھے تو مہمانانِ خصوصی میں پاکستان سے تعلق رکھنے والے شعراء میں مشہور و معروف شاعر محترم احمد منیب صاحب اور مشہور و معروف معتبر شاعر محترم غلام مصطفیٰ دائم صاحب نیز مہمانانِ اعزازی میں مشہور و معروف شاعرہ محترمہ ڈاکٹر مینا نقوی صاحبہ بھارت اور محترمہ غزالہ انجم صاحبہ پاکستان شامل تھیں، تمامی استاد شعرائے کرام کی موجودگی محفل کو مزید روشن کرگئی... محفلِ ھٰذا کی نظامت معروف شاعرہ محترمہ صبیحہ صدف صاحبہ بھارت نے نہایت ہی خوش نوائی سے فرمائی اور اپنے منفرد اندازِ تخاطب سے اِس آنلائن محفلِ مشاعرہ میں سماں باندھ دیا. ============================= پروگرام کا آغاز ربِّ ذوالجَلال کی پاک وشفّاف حمد وثنا کے ساتھ ادنیٰ خادمِ اردو ادب، بندۂ ناچیز نفیس احمد نفیسؔ ناندوروی بھارت نے یوں کِیا... اعـلٰی مَقــام تیـرا ، اَفـضل کلام تیرا مِدحَت سَرا دو عالم وہ پاک نام تیرا تَوبہ نفیسؔ کی تُو کر لے قبول یا رَب آقـــا کا اُمّتی ہے ، بَنـدہ غُـــلام تیـرا بندۂ ناچیز... نفیسؔ ناندوروی بھارت ساتھ ہی پاکستان سے تعلق رکھنے والے مشہور و معروف شاعر محترم احمد منیب صاحب نے بھی عمدہ حمد بارئ تعالٰی پیش کی... فرماتے ہیں کہ.. سلسلہ اوّل سے آخر ایک ہی آواز کا اِنتہا کا کیا رہا جھگڑا یا پھر آغاز کا نور ہی زُلفِ درازِ روزنِ زندانِ ذات نور ہی بندِ قبائے جاں زمانہ ساز کا محترم احمد منیب صاحب پاکستان اور رسول اکرم نُور مُجسّم محمّدﷺ کی شانِ اقدس میں نعتیہ کلام کا نظرانۂ عقیدت محترم صابر جاذب لیہ پاکستان نے یوں پیش کیا کہ... دیکھے گئے ہیں لوگ بہت خوش نصیب سے جو فیض پا گئے ہیں دیارِ حبیب سے ﷺ یا ربّ مجھے زیارتِ طیبہ نصیب کر صابرؔ کی استدعا ہے خدائے مجیب سے محترم صابر جاذب لیہ پاکستان رسول اکرم نُور مُجسّم محمّدﷺ کی شانِ اقدس میں مزید نعتیہ کلام کا نظرانۂ عقیدت محترم فانی ایاز گولوی صاحب کشمیرنے یوں پیش کیا کہ... وہ قسمت مری بھی جگا دو نبی جی مجھے بھی مدینہ دکھا دو نبی جی ترے آستانے پہ فانی ہو آیا قضا دید میں ہو دعا دو نبی جی محترم فانی ایاز گولوی صاحب کشمیر ============================= احباب گرامی محفل میں جلوہ افروز معزّز مہمانانِ خصوصی و مہمانانِ اعزازی کا نمونۂ طرحی کلام.... ۱ بھائی ہیں بہت یوسفِ کنعان بہت کم زخموں کو بھی زخموں کی ہے پہچان بہت کم شرمندہ ہوں اِس جرم پہ احساس ہے مجھ کو بھیگا ہے ترے عشق میں دامان بہت کم محترم احمد منیب صاحب پاکستان ۲ مانا کہ نہیں دہر میں انسان بہت کَم ملبوس ہوں در جامۂ قرآن، بہت کَم اندیشۂ امروز نہ فردا کی کوئی فکر حالات کے دائم ہوئے احسان بہت کَم محترم غلام مصطفیٰ دائم اعوان ۳ جب سے ہوئے خوش حالی کے امکان بہت کم مفلس کے یہاں باقی ہیں ارمان بہت کم ہے سنج فغاں بارگہ شاہ میں انجم کیوں امن کی جانب ہوا رجحان بہت کم محترمہ غزالہ انجم صاحبہ پاکستان ۴ اس شہر محبت میں ہیں ذیشان بہت کم آتے ہیں یہاں شاہ کے فرمان بہت کم جذبوں کو پزیرائی بھی ملتی نہیں مینا شاکی ہیں مگر پھر بھی یہ مہمان بہت کم محترمہ ڈاکٹر مینا نقوی صاحبہ بھارت ============================= علاوہ ازیں محفل میں جلوہ افروز دیگر معزّز شعرائے کرام کا نمونۂ طرحی کلام.... ہم بارِ سفر سے ہیں پریشان بہت کم کچھ پیاس ہےکچھ دھول ہےسامان بہت کم مضمون ہر اک آپ سے منسوب ہوا جائے شیداّ کے یہاں دوسرے عنوان بہت کم محترم علی شیدا صاحب کشمیر رہتا تھا کبھی شہر جو سنسان بہت کم آتے ہیں نظر اب وہاں انسان بہت کم دفتر میں شکایت کا کبھی کھول نہ پایا اصغر کی طرح ہیں یہاں نادان بہت کم محترم اصغر شمیم صاحب بھارت مٹی کے ہیں مادھو یہاں انسان بہت کم اس راہ میں کانٹے ملے گلدان بہت کم جس راہ پہ نکلے وہیں طوفان سے مڈھ بھیڑ عامرؔ کے لیے منزلِ آسان بہت کم محترم عامرؔحسنی صاحب ملائیشیا ہے پاس ترے حشر کا سامان بہت کم کیسے منہ دکھاؤگے ہے ایمان بہت کم ماں باپ سے لڑ تا ہے وہ ہر بات پہ اکثر رشتوں کی ہے دلکش جسے پہچان بہت کم محترم مصطفیٰ دلکش صاحب بھارت ہر ایک غزل کا رکھتا ہوں عنوان بہت کم ہر شخص یہاں دانا ہے نادان بہت کم جعفر یہ سیاست بھی عجب کھیل ہے یہاں مارے گئے انسان ہیں شیطان بہت کم محترم جعفر بڈھانوی صاحب بھارت یہ بات نہیں ہے, ہیں مسلمان بہت کم ملتے ہیں مگر صاحبِ ایمان بہت کم پہلے تو"صدف"ہوتی تھی ہربات پہ حیراں کیا بات یے اب رہتی ہے حیران بہت کم محترمہ صبیحہ صدف صاحبہ بھارت احباب...، اس طرح تمامی معزّز شعرائے کرام نے یکے بعد دیگرے اپنے عمدہ کلام مع تفکّرات اور منفرد طرزِ سُخن سے اِس ادبی محفل میں چار چاند لگادیئے... پروگرام کا لطف تَدمَزید دوبالا ہوگیا جب ایک جانب معزّز سامعینِ مجلس نے شعراۓ کرام کو داد وتحسین سے نوازہ تو دوسری جانب ماہرینِ علم وفن محترم ڈاکٹر شفاعت فہیم صاحب بھارت اور محترم مصطفیٰ دائم صاحب نے کلام میں موجود معائب و محاسن پر شعرائے کرام کی رہنمائی فرمائیں اور تمام غزلیات پر نہایت باریک بینی, چابک دستی اور غیر جانبدارانہ طریقے سے تنقیدی جائزہ لیتے رہنمائی فرمائی... جسے شعرائے عالم نے خندہ پیشانی سے قبول کِیا... احبابِ گرامی اسی کے ساتھ محفل ھٰذا کے صدر مشہور و معروف شاعر محترم مائل پالدھوی صاحب بھارت کے خطبۂ صدارت پیش کِیا اور محترم توصیف ترنل صاحب کے اظہارِ تشکر پر اس کامیاب محفل کا اختتام ہوا... اس تاریخی آنلائن طرحی مشاعرے میں شریک معزّز موصوفیانِ اردو ادب اور تمامی رفقائے بزم کو ادارے کی جانب سے مبارکباد... ساتھ ہی ادارۂ عالمی بیسٹ اردو پوئیٹری گروپ کی انتظاميہ بالخصوص ادارے کے بانی و چئیرمن محترم توصيف ترنل صاحب کو خدمتِ اردو ادب کیلئے قلبی مبارکباد پیش کرتا ہوں...





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


مقبول ترین

اسلامی و سبق آموز


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved