تازہ ترین  

غزل
    |     3 months ago     |    شعر و شاعری

کیا غضب ہے عجب منافق ہیں
اور کہتے ہیں کب منافق ہیں؟ 

کیا یہاں ایک بھی نہیں مومن؟
کیا یہاں سب کے سب منافق ہیں؟ 

بے ادب مسندوں پر قابض ہیں 
چْپ ہیں سب با ادب منافق ہیں   

جن کو مطلب ہے تجھ سے سچے ہیں
ہم مگر بے طلب منافق ہیں 

ان کو زاہدؔ میں کیا کہوں جن کے
طور منفی ہیں ڈھب منافق ہیں 






Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved