تازہ ترین  

انمول عورت ۔۔۔ سو لفظی کہانی
    |     1 month ago     |    افسانہ / کہانی
ایک طرف "میرا جسم میری مرضی " کے نعرے بلند ہو رہے تھے تو دوسری جانب مرد اس خوش فہمی میں مبتلا تھا کہ " میرے پاس تم ہو " ۔ ہماری بھولی عوام اس "دو ٹکے کی عورت " پر ترس کھا رہی تھی اور مرد کو کوس رہی تھی کہ آخر وہ ظالم اسے دوبارہ اپنا کیوں نہیں لیتا ۔ اس سارے منظر سے دور " انمول عورت" سوچ رہی تھی کہ مشرق اور مغرب کیسے مل سکتے ہیں؟ مگر پھر بھی بڑی آسانی سے لوگوں کے ذہنوں میں یہ میٹھا زہر گھولا جا رہا تھا کہ "عورت کی آزادی وقت کی ضرورت ہے" ۔





Comments


There is no Comments to display at the moment.



فیس بک پیج


اہم خبریں

تازہ ترین کالم / مضامین


نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved