ستر کی دہائی کے دو اہم شعراء "قاضی ظفر اقبال اور طینوس فردوس" کے اعزاز میں حلقہ ارباب ذوق کی جانب سے خصوصی نشست
 
اتوار،09 دسمبر2018، کی شام حلقہ اربابِ ذوق ،لاہور،حالیہ سیشن کا37واں اجلاس سیکرٹری حلقہ عقیل اختر اور جوائنٹ سیکرٹری بابرریاض نے پاک ٹی ہاؤس، لاہور میں منعقد کرایا ۔’’ستر کی دہائی کے دو اہم شعرا‘‘ کے عنوان سے منعقد کیے گئے اِس خصوصی اجلاس کے صدارتی پینل میں ڈاکٹر سعادت سعید اور ڈاکٹر یونس خیال شامل تھے۔ بابر ریاض کی پیش کردہ گزشتہ اجلاس کی کاروائی کی توثیق کے بعد سیکرٹری حلقہ نے اجلاس کا باقاعدہ آغاز کیا۔اِس خصوصی اجلاس میں ستر کی دہائی میں سامنے آنے والے دوشعرا کو مدعو کیا گیا تھا جن میں قاضی ظفراقبال اورطینوش فردوس شامل تھے۔ سب سے پہلے قاضی ظفراقبال کے حوالے سے نوید صادق نے اپنا مضمون ’’غرفہء شب (ایک مطالعہ)‘‘ پیش کیا۔ مضمون کے بعد قاضی ظفراقبال نے اپنے تخلیقی سفر کے بارے میں گُفتگوکے بعد حاضرین کو اپناکلام سُنایا۔ نمونہء کلام یہ ہے ’’دم بدم کارِ طلسمات کُشا مانگتی ہے ۔۔پھر ہوس معرکہء کوہِ ندا مانگتی ہے‘‘۔ قاضی ظف


حکومت کا شریف برادران کے گرد گھیرا مزید تنگ کرنے کا فیصلہ
 
تحریک انصاف کی حکومت نے رائے ونڈ میں شریف خاندان کی رہائش گاہ اور سابق وزیرِ اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کے ہوائی سفری اخراجات کے کیس کو نیب کو بھجوانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیرِ اعظم کے مشیر برائے میڈیا افتخار درانی کا کہنا تھا سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے 60 کروڑ روپے اپنے ہوائی سفر پر خرچ کیے اور رائے ونڈ کی سیکیورٹی پر بھی 60 کروڑ روپے خرچ ہوئے ہیں۔مریم اورنگزیب نے شہباز شریف کے حق میں جواز پیش کرتے ہوئے کہا کہ سابق وزیراعلیٰ پنجاب نے جہاز اور ہیلی کاپٹر صرف عوامی خدمت کی ذمہ داری نبھانے کے لیے استعمال کیے اس لیے ان اخراجات کو فضولیات کے ضمرے نہیں ڈالا جاسکتا۔انہوں نے وضاحت دی کہ شہباز شریف نے بطور وزیراعلی اپنے استحقاق اور قانون کے مطابق یہ سہولت لی جبکہ سول ایوی ایشن نے پنجاب حکومت کا جہاز ناقابلِ پرواز قرار دیا تھا، تاہم وہ قومی بچت کی خاطر زندگی کا خطرہ مول لے کر پھر بھی اسے استعمال کرتے رہے یہ سب


حضور نبی کریم ﷺ کو تمام جہانوں کے لئے رحمت بنا کر بھیجا گیا۔
 
 کمالیہ ، آپکی بات ( نیوز ایڈیٹر ۔ ڈاکٹر غلام مرتضیٰ ) حضور نبی کریم ﷺ کو تمام جہانوں کے لئے رحمت بنا کر بھیجا گیا۔ زندگی کے ہر شعبہ میں سیرت طیبہ ہمارے لئے مشعل راہ کی حیثیت رکھتی ہے۔ حضرت محمد ﷺ کی ذات باعث تخلیق کائنات ہے۔ آپ ﷺ سے محبت ہمارے ایمان کا حصہّ ہے۔ اور آپ ﷺ کا ذکر خیر کرنا گناہوں سے مغفرت کا وسیلہ ہے۔ ان خیالات کا اظہار چوہدری آرٹس سوسائٹی اینڈ کلچرل ونگ کے ایم ڈی، ایم افضل چوہدری نے سوسائٹی کی تیسری سالانہ رحمت اللعالمین کانفرنس کی افتتاحی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ کانفرنس جسکی صدارت پاکستان عوامی تحریک تحصیل کمالیہ کے صدر سجاد مسعود اور بزم سرور کونین کے سرپرست اعلیٰ حاجی شاہد نے کی۔ کانفرنس کے اختتامی نشست سے ممتاز عالم دین حضرت علامہ مولانا محمد صابر سیالوی نے اپنے خطاب میں کہا کہ ماہ ربیع الاوّل مسلمانوں کے لئے رحمتوں و سعادتوں اور برکتوں بھرا مہینہ ہے۔ اور ربیع الاول کے بابرکت ایام سیرت رسول ﷺ پر عمل


ففتھ جنریشن وار
 
غلغلہ ہے کہ دنیا میں پانچویں نسل کی جنگ(ففتھ جنریشن وار) جاری ہے. یہ ایک ایسی جنگ ہے جس میں تیر و تفنگ، بندوق و توپ اور اس قبیل کا دوسرا خونریز اسلحہ استعمال نہیں کیا جاتا بلکہ پروپیگنڈہ کے زور پر افراد یا قوم کی برین واشنگ(دماغی غسل) کے ذریعے انتشار و فساد پھیلا کر دشمن اپنے مقاصد حاصل کرتا ہے.دانشور اور تجزیہ کار بتاتے ہیں کہ پاکستان بھی ففتھ جنریشن وار کی زد میں ہے. بہت سے لوگ اس سے انکار یا اس کی تردید کرتے ہیں لیکن اگر حالات کا جائزہ لیا جائے تو حقیقت سامنے آتی ہے کہ واقعی ہم بحیثیت مجموعی جہاں عمومی دہشت گردی کا شکار ہیں وہیں جنگ کی اس نئی قسم یعنی ففتھ جنریشن وار کا بھی شکار ہیں. گویا بحیثیت قوم ہمیں اپنی بقا و سلامتی کے لیے چومکھی لڑائی لڑنی پڑ رہی ہے. ففتھ جنریشن وار جیسا کہ آپ کو بتایا ہے کہ ایک قسم کی پروپیگنڈہ مہم جوئی ہے الیکٹرانک و پرنٹ میڈیا اور آج کل سوشل میڈیا بھی شامل ہوگیا ہے کے ذریعے لڑی جاتی ہے.خیر دشمن سے تو توق


بات سے بات جو نکلی تو کہاں تک پہنچی
 
رمز تھی دل کی کوئی کیسے زباں تک پہنچیبات سے بات جو نکلی تو کہاں تک پہنچیایک ماتھے کی شکن گرم رویئے میں ڈھلیپھر وہ تکرار بنی ۔۔ تیر و کماں تک پہنچیآج موضوعِ سخن ہم نے وفا رکھا تھابات انساں سے چلی اور سگاں تک پہنچیحق کے متوالوں کی آنکھوں میں اتر آیا لہوبات ملحد کی جو مومن کی اذاں تک پہنچی اسکی پرواز بلندی کو نہ چھوجائے کہیں کیسے چڑیا یہ بنا پر کے وہاں تک پہنچی رنگ محفل پہ چڑھا, ذکرِ سخن خوب ہوابات اردو کی, زباں اور بیاں تک پہنچیدل ترستا تھا تلاوت کے لیئے جس کی حیاآج اردو وہ میری پاک زباں تک پہنچی


ساڑھی کے فال سے
 
میری طرح بہت سے لوگ اس علم سے نابلد ہونگے کہ ساڑھی باندھی جاتی ہے کہ پہنی جاتی ہے۔ایک انڈین دوست نے از راہ تفنن اپنی بائیں آنکھ دباتے ہوئے اس حقیقت سے یوں پردہ اٹھایا کہ ناف سے نیچے باندھی جاتی ہے اور پیٹ سے ذرا اوپر پہنی جاتی ہے گویا پیٹ نہ ہوا باندھنے اور پہننے کے درمیان حد فاصل ہو گیا۔جواب سے اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ پیٹ کیوں ’’ظاہر‘‘ کیا جاتا ہے۔ساڑھی ایک ایسا لباس ہے جسے پہن کر بھی خاتون بے لباس سی دکھائی دیتی ہے۔ساڑھی ساری بھی پہنی ہو تو بھی عورت آدھی ساڑھی کی بنا ہی دکھتی ہے،شائد ساڑھی کو دیکھ کر ہی پنجابی کا یہ اکھان بنا ہو کہ ’’دکھتی ہے تو بکتی ہے‘‘ساڑھی ایسا لباس ہے جس میں مکمل مساوات پائی جاتی ہے یعنی جسم کا جو حصہ دکھنا چاہئے وہی دکھائی دیتا ہے باقی ساڑھی ڈھانپ لیتی ہے اسی کو دیکھنے کے لئے من چلے اتاولے ہوئے رہتے ہیں۔ کہتے ہیں دو چیزیں بنارس کی پہچان ہیں ،بنارسی ساڑھی اور بنارسی ٹھک،مثل مشہور ہے کہ روم میں رہ


ستر کی دہائی کے دو اہم شعراء "قاضی ظفر اقبال اور طینوس فردوس" کے اعزاز میں حلقہ ارباب ذوق کی جانب سے خصوصی نشست
 
اتوار،09 دسمبر2018، کی شام حلقہ اربابِ ذوق ،لاہور،حالیہ سیشن کا37واں اجلاس سیکرٹری حلقہ عقیل اختر اور جوائنٹ سیکرٹری بابرریاض نے پاک ٹی ہاؤس، لاہور میں منعقد کرایا ۔’’ستر کی دہائی کے دو اہم شعرا‘‘ کے عنوان سے منعقد کیے گئے اِس خصوصی اجلاس کے صدارتی پینل میں ڈاکٹر سعادت سعید اور ڈاکٹر یونس خیال شامل تھے۔ بابر ریاض کی پیش کردہ گزشتہ اجلاس کی کاروائی کی توثیق کے بعد سیکرٹری حلقہ نے اجلاس کا باقاعدہ آغاز کیا۔اِس خصوصی اجلاس میں ستر کی دہائی میں سامنے آنے والے دوشعرا کو مدعو کیا گیا تھا جن میں قاضی ظفراقبال اورطینوش فردوس شامل تھے۔ سب سے پہلے قاضی ظفراقبال کے حوالے سے نوید صادق نے اپنا مضمون ’’غرفہء شب (ایک مطالعہ)‘‘ پیش کیا۔ مضمون کے بعد قاضی ظفراقبال نے اپنے تخلیقی سفر کے بارے میں گُفتگوکے بعد حاضرین کو اپناکلام سُنایا۔ نمونہء کلام یہ ہے ’’دم بدم کارِ طلسمات کُشا مانگتی ہے ۔۔پھر ہوس معرکہء کوہِ ندا مانگتی ہے‘‘۔ قاضی ظف


ماما ماما مجھ کو بچا لو
 
ON KASUR INCIDENT August 2017ننھا سا پیارا سا بچہ رات کے پچھلے پہر میں ڈر کراٹھ کر بیٹھ گیا ہےماما ماما .....مجھ کو بچا لومجھ کو کنویں میں لٹکا دیں گےکاٹن کا جو کرتا ماما پیار سے آپ نے سی کے دیا ہے اس کو داغ لگا دیں گے پھر مجھ کو جھنجھوڑیں گے پھر مجھ کو تڑپا دیں گے ماما ماما ........مجھ کو چھپا لو جلادوں سے مجھ کو بچا لو ماما ماما بات سنو نا میں اسکول نہیں جاؤں گا دوست میرے طعنے دیں گے کیسے پڑھوں گا کیسے بڑھوں گا روشن نام میں کیسے کروں گا ماما میرا جرم بتاؤ جس کی سزا میں نے پائی ہے اب تو ہر اک سانس میں جیسے رسوائی ہی رسوائی ہے  ماما یہ حاکم سے پوچھو کب حالات اچھے ھوں گے کچھ تو وہ اقدام کریں گے ان کے بھی تو بچے ھوں گے؟؟؟عابد عمر


تلاش۔۔۔انتہائی زبردست تحریر
 
عجیب سی کیفیت سے دوچار نوفل بنا سوچے سمجھے مسلسل گاڑی چلائے جا رہا تھا۔زندگی کی مصروفیات۔۔۔۔ قدم قدم پر بے چینی۔۔۔۔ ان سب سے وہ تنگ آچکا تھا۔۔۔۔ اسے کسی چیز کی شدت سے کمی محسوس ہو رہی تھی۔۔۔۔۔۔۔ مگر کس چیز کی؟؟؟سبھی کچھ تو تھا ۔۔۔۔ والدین۔۔۔۔۔ مال و دولت۔۔۔۔ اہل وعیال۔۔۔۔۔ خدا نے سب کچھ تو عطا کیا تھا اسے مگر پھر بھی وہ بے چین تھا۔۔۔ اور اپنی اندرونی کیفیات سے نا آشنا، مارا مارا پھر رہا تھا۔۔۔مسلسل گاڑی چلاتے ہوئے نوفل شہر سے کافی دور نکل چکا تھا اور اسے پیاس بھی شدت سے محسوس ہونے لگی تھی۔ پیاس کے ہاتھوں مجبور نوفل نے گاڑی روکی اور باہر نکل کر اپنے ارد گرد نظر دوڑائی۔بائیں طرف ذرا فاصلے پر ایک گھر نظر آیا۔ پیاس کا ستایا ہوا نوفل اس گھر کی طرف چل پڑا تھا۔ ابھی گھر سے پیچھے ہی تھا کہ بچے کھیلتے ہوئے نظر آئے۔ بیٹا میرا نام نوفل ہے ۔۔۔مجھے بہت پیاس لگی ہے ، ایک گلاس پانی پلادو۔۔۔۔بچوں کو مخاطب کرکے نوفل نے پانی طلب کیا۔اجنبی شخص


رقص میں مہارت ہے فلم میں ہر کردار نبھانے کی صلاحیت رکھتی ہوں ،صائم
 
رقص میں مہارت ہے فلم میں ہر کردار نبھانے کی صلاحیت رکھتی ہوں ،صائم سفارش اور شارٹ کٹ پہ یقین نہیں رکھتی کامیابی کی ضمانت محنت اور لگن میں ہے اداکارہ کی گفتگو لاہور(باؤ جی) کامیابی کی ضمانت محنت اور لگن ہے سفارش اور شارٹ کٹ سے کوئی بھی منزل حاصل نہیں کرسکتا جب سے فلم انڈسٹری میں کام کررہی ہوں اپنے انداز اور معیار کو کبھی نہیں بدلا، رقص میں مہارت کے ساتھ ساتھ فلم میں ہر کردار بہ خوبی نبھانے کی صلاحیت رکھتی ہوں ان خیالات کا اظہارمعروف فلمسٹار صائم نے یواین پی سے کیا انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان شوبز انڈسٹری اپنے عروج کی طرف گامزن ہے مگر ہمیں اورتیزی سے اچھی فلمیں بنانے کی ضرورت ہے جس طرح ہم سالانہ کچھ اچھی فلمیں بنانے لگے ہیں اسی طرح اگر ہم ماہانہ کی بنیاد پر چند اچھی فلمیں بنالیں تو یقیناًہماری انڈسٹری دوبارہ وہی مقام حاصل کرے گی جو اسے چاہیے۔


جگر کی صفائی
 
صفائی نصف ایمان ہے ہر چیز کی صفائی رکھنا ضروری ہے کیونکہ صفائی رکھنے سے بہت سی بیماریوں سے بچا جا سکتا ہے جیسے کہتے ہیں کہ پرہیز علاج سے بہتر ہے اسی طرح صفائی بھی بیماریوں کی روک تھام میں بہت اہم کردار ادا کرتی ہے ہم نے اپنی روز مرہ زندگی میں دیکھا ہے کہ ہم صبح سویرے اٹھ کر نہاتے ہیں یعنی اپنے جسم کی صفائی کرتے ہیں پھر اپنے بزنس کی طرف گامزن ہوتے ہیں تو سب سے پہلے اس جگہ کی صفائی کرتے ہیں جہاں پر ہم نے سارا دن کام کرنا ہوتا ہے اس کے بعد اپنے دن کا آغاز کرتے ہیں یعنی ہم اپنے دن کا آغاز صفائی سے کرتے ہیںآجکل ہمارے معاشرے میں آئے دن نئی نئی بیماریاں منظر عام پر آ رہی ہیں جن کی بدولت بہت سے افراد ہسپتالوں کی نظر ہورہے ہیں ان کی سب سے بڑی وجہ اندرونی اعضاء کی صفائی ہے جس طرح ہم اپنے آپ کو خوبصورت رکھنے کے لئے بیرونی صفائی کا خیال رکھتے ہیں اسی طرح اندرونی اعضاء کی صفائی بھی ضروری ہوتی ہے ہمارے جسم میں ایک بنیادی اعضاء جگر ہے جو جسم میں ای


آئی فون میں فائیو جی ٹیکنالوجی کی آمد جلد ممکن نہیں۔۔۔تفصیلات جانیئے
 
ایپل کے نئے آئی فونز 2019 میں متعارف ہوں گے مگر اس میں 5 جی ٹیکنالوجی نہیں ہوگی۔ یہ دعویٰ بلومبرگ نے ایک رپورٹ میں کیا ہے۔ رپورٹ میں ایپل کے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا گیا کہ یہ کمپنی فائیو جی آئی فون کم از کم 2020 تک متعارف نہیں کرائے گی۔ یعنی ایپل اس معاملے میں اپنی حریف کمپنیوں جیسے سام سنگ سے ایک سال پیچھے رہ جائے گی جو کہ 2019 میں فائی جی فونز متعارف کرانے کا ارادہ رکھتی ہے۔ اس سے قبل گزشتہ ماہ فاسٹ کمپنی کی رپورٹ میں بھی یہی بات سامنے آئی تھی اور دونوں رپورٹس میں اس کی ایک ہی وجہ بتائی گئی ہے۔  ڈان نیوز ویب رپورٹس کے مطابق ایپل نے آئی فونز کے لیے فائیو جی موڈیز کے لیے انٹیل سے ایک معاہدہ کیا ہے مگر انٹیل یہ موڈیم چپ 2019 کے آئی فون لانچ تک فراہم نہیں کرسکے گی۔ فاسٹ کمپنی نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا کہ ایپل انٹیل کے فائیو جی موڈیم 8261 کو 2020 کے آئی فونز میں استعمال کرنے کا ارادہ رکھتی ہے۔ ایپل نے اس حوالے سے 8060 چپ کو استعمال کیا مگر ہ


شاہد آفریدی کی ٹی ٹین لیگ میں جارحانہ بلےبازی ۔۔۔تفصیلات جانیے
 
متحدہ عرب امارات میں کھیلی جارہی ٹی ٹین لیگ کا دوسرا ایڈیشن اپنے اختتامی مراحل میں داخل ہوچکا ہے جہاں فائنل میں پختونز اور ناردرن واریئرز مدمقابل ہوں گے۔ شاہد آفریدی کی قیادت میں پختونز پہلے ایلی مینیٹر میں ناردرن واریئرز کو شکست دے کر فائنل میں پہنچنے والی پہلی ٹیم بن گئی تاہم ناردرن واریئرز نے میراٹھا عربینز کو باآسانی شکست دے کر فائنل میں اپنی جگہ پکی کرلی۔ پختونز کے کپتان شاہد آفریدی نے صرف 17 گیندوں پر 3 چوکوں اور 7 چھکوں کی مدد سے ناقابل شکست 59 رنز بنائے۔ واریئرز نے دوسرے میچ میں ولجوئین، وہاب ریاض اور آندرے رسل کی بہترین کارکردگی کے باعث باآسانی کامیابی حاصل کرکے پختونز کے ساتھ ایک اور مقابلے کے لیے فائنل میں جگہ بنائی۔ میراٹھا عربینز میں الیکس ہیلز، کامران اکمل، براوو، برینڈن ٹیلر جیسے بلے باز شامل تھے لیکن وہ خاطر خوا کارکردگی نہ دکھا سکے۔(بشکریہ ڈان نیوز)


فیس بک پیج

مقبول ترین

تعارف / انٹرویو

آج کے کالم و مضامین

اہم خبریں

نیوز چینلز
قومی اخبارات
اردو ویب سائٹیں

ویڈیوز
اشتہارات

آپکی بات ڈاٹ کام آپ کی اپنی ویب سائٹ ہے ، ہمارے ساتھ رہنے کا شکریہ
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ آپکی بات محفوظ ہیں۔
Copyright © 2018 apkibat. All Rights Reserved